Urdu – اردو

Führungskompetenz, Intelligenz und körperliche Gesundheit

Der Heilige Prophet (Friede und Segnungen Allahs sei auf ihm) sagte:

„Allah bevorzugt die gesunden und leistungsfähigen Gläubigen gegenüber den schwachen und kraftlosen Gläubigen“

Mit steigendem Alter verändern sich zwangsläufig die Möglichkeiten zur Erhaltung der körperlichen Gesundheit.

Die Mitglieder der Ansarullah befinden sich in solch einem Alter, in dem diese zur Aufrechterhaltung ihrer Gesundheit, Leistungsfähigkeit und Aktivität wesentlich mehr Aufmerksamkeit aufbringen müssen.

Hadhrat Khalifa-tul-Masih V (möge Allah seine Hand stärken) sagte anlässlich des Amla-Meetings der Majlis-e-Ansarullah:

„Jeder Nasir (Mitglied der Ansarullah) soll sich verpflichten – unabhängig seiner Wohnsituation – regelmäßig zu Fuß zu gehen, spazieren zu gehen, Fahrrad zu fahren oder irgendeine andere Sportart zu betreiben. “

Ebenso sagte Hadhrat Khalifa-tul-Masih V (möge Allah seine Hand stärken) , dass es nicht der Sinn sei diese Aktivitäten einfach nur auszuführen. Diese Aktivitäten wurden deswegen genannt, damit die Ansar folgendes verstehen: Wir sind zwar aus der Khuddam-ul-Ahmadiyya hinausgewachsen, trotzdem treibt uns Stärke und Willenskraft an. So könne wir Tabligh und andere Verpflichtungen übernehmen.

Gemäß dieser Zitate sollen die folgenden Punkte Beachtung finden:

  • Jeder Nasir soll es sich zur Routine machen regelmäßig zu Fuß zu gehen und Spazieren zu gehen.
  • Das Radfahren ist ein nützliches und wirksames Hilfsmittel für die Aufrechterhaltung der körperlichen Fitness. Daher soll regelmäßig Fahrrad gefahren werden und für ortsnahe Tätigkeiten soll das Fahrrad bevorzugt werden.
  • Auf die Nutzung örtlicher Sport- und Fitnessmöglichkeiten soll aufmerksam gemacht werden.
  • Zur Gewährleistung der Hygiene soll jeder Nasir regelmäßig seinen körperlich inspizieren
  • Auf die regelmäßige Säuberung und Untersuchungen der Zähne soll geachtet werden.

 

Körperliche Gesundheit durch Sport

  • Jede Majlis und Region soll im Center der Jamaat oder ähnlichen Örtlichkeiten Tischtennis, Badminton oder andere Sportarten betreiben.
  • Jede Majlis soll mindestens einmal im Jahr ein Sportturnier veranstalten. Jede Region soll zwei Mal jährlich Sportstuniere mit Majalis-Mannschaften durchführen. Es soll eine oder zwei Sportarten wie Volleyball, Fußball, Badminton, Carrom (Fingerbillard), Tischtennis, etc. ausgewählt werden.

قیادت ذہانت و صحتِ جسمانی

حضرت نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کہ:۔

’’ صحت مند اور توا نا مومن کمزور اور ضعیف مومن سے بہتر اور اللہ تعالیٰ کو زیادہ محبوب ہے‘‘

 

جسمانی صحت کو برقرار رکھنے کے تقاضے عمر کے ساتھ بدلتے رہتے ہیں۔ انصار عمر کے جس حصّہ میں ہیں اِس میں اُنہیں صحت مند ، توانا اور چاک و چوبند رہنے کیلئے نسبتاً زیادہ توجہ کرنے کی ضرورت ہوتی ہے۔

حضرت خلیفۃ المسیح الخامس ایدہ اللہ بنصرہِ العزیز نے مجلس عاملہ انصار اللہ جرمنی سے فرمایا تھا کہ

 

’’ ہر ناصر خواہ وہ کہیں بھی رہتا ہو اُسے پابند کریں کہ وہ باقاعدگی سے پیدل چلتا ہو، سیر کرتا ہو، سائیکل چلاتا ہویا کوئی نہ کوئی ورزش کر تا ہو‘‘۔

 

اسی طرح حضرت خلیفۃ المسیح الخامس ایدہ اللہ تعالیٰ نے صفِ دوم کے انصار سے متعلق فرمایا:

 

’’ صفِ دوم کا یہ مقصد نہیں تھا کہ سائیکل چلا لو، دوڑیں لگا لو۔ یہ چیزیں دی گئی ہیں تا کہ وہ سمجھیں کہ ہم خدام میں سے آکر بوڑھے نہیں ہو گئے بلکہ ہمارے اندر طاقت اور قوت ارادی بھی ہے جس سے ہم تبلیغ اور باقی سارے کام بھی کر سکتے ہیں‘‘۔

 

لہٰذا ان ارشادات کو مدِ نظر رکھتے ہوئے درج ذیل امور کو پیش نظر رکھا جائے:۔

  • ہر ناصر باقاعدگی کے ساتھ پیدل چلنے اور سیر کر نے کو اپنا معمول بنالے۔
  • سائیکلنگ جسمانی ورزش کیلئے ایک مفید اور موثر ذریعہ ہے۔ لہٰذا باقاعدگی سے سائیکل چلانا اور مقامی شہر کی حدود میں گھر سے باہر کے کاموں کیلئے سائیکل کے استعمال کو رواج دیا جائے۔
  • جسمانی فٹنس اور ورزش کیلئے ہر چھوٹے بڑے شہر و قصبہ میں عام سہولتیں موجود ہیں، اُن سے استفادہ کرنے کی جانب توجہ کی جائے۔
  • حفظان صحت کیلئے باقاعدگی سے طبعی معائنہ کرواتے رہنا چاہئیے۔
  • دانتوں کی باقاعدگی سے صفائی اور معائنہ کرواتے رہنا چاہئیے۔

صحت جسمانی بذریعہ سپورٹس

  • ہر مجلس اور ہر ریجن ، جماعتی سنٹر یا کسی دوسری جگہ پر ٹیبل ٹینس ، بیڈ منٹن اور رِنگ وغیرہ جیسی کھیلوں کا انتظام کریں گے۔
  • ہر مجلس سال میں کم از کم ایک مرتبہ کوئی باقاعدہ سپورٹس ٹورنامنٹ کا پروگرام منعقد کرے گی۔ اسی طرح سے ہر ریجن میں سال میں دو بین المجالس سپورٹس پروگرام منعقد ہوں گے۔ والی بال،فٹ بال ، بیڈ منٹن ، رِنگ ، کیرم بورڈ، ٹیبل ٹینس وغیرہ میں سے ایک یا دو کھیلوں کا اس مقصد کیلئے انتخاب کیا جاسکتا ہے۔
  • ہر ریجن میں نائب ناظم صحت جسمانی کے ساتھ کم از کم تین انصار ممبران پر مشتمل سپورٹس کمیٹی موجود ہوگی جو اپنی ریجن کی مجالس میں صحت جسمانی کے پروگراموں پر عمل در آمد کروانے میں مدد و معاونت کرے گی اور انصار کو جسمانی صحت کیلئے ورزش اور اس سلسلہ میں مرکز کی جانب سے ارسال کر دہ ہدایات پر عمل کرنے کی طرف مسلسل توجہ دلائے گی۔ نیز ریجنل اجتماعات،نیشنل اجتماع اور دیگر ورزشی مقابلہ جات و کوالیفائنگ راؤنڈ وغیرہ کے موقع پر مرکزی قیادت صحت جسمانی سے تعاون کرے گی۔جملہ ناظمین علاقہ اپنی سپورٹس کمیٹی کے اراکین کے ناموں کی فہرست مرکز ارسال کریں گے۔
  • ایسی مجالس جہاں جماعتی سنٹر میں کسی کھیل کے انتظام کیلئے مناسب جگہ موجود نہ ہو وہ اپنے مقامی Gemainde کے ذریعے سپورٹس ہال کی سہولت حاصل کرنے کی کوشش کریں گی۔مقامی شہری انتظامیہ کے ساتھ اپنے تعلقات کا دائرہ وسیع کرنے اور غیر ملکیوں کے نمائندوں Ausländerbeirat کے توسط سے سپورٹس کیلئے سہولتیں حاصل کرنے کی کوشش کی جائیگی۔
  • تمام مجالس دورانِ سال ذہانت اور صحت جسمانی کے اجتماعی پروگراموں کے تحت انصار کے ماہانہ اجلاس یا پکنگ پروگرام کے اختتام پر مشاہدہ معائنہ ، پیغام رسانی، اجتماعی سیر ، سائیکلنگ،کیرم بورڈ ، ڈاٹ گیم، ٹیبل ٹینس وغیرہ کا (ان میں سے کسی ایک یا دو کا انتخاب کیا جاسکتا ہے) پروگرام تشکیل دیں گی۔ یہ پروگرام سال میں کم از کم تین مرتبہ ضرور منعقد کیا جائے گا۔
  • مجلس انصار اللہ کی مرکزی سپورٹس ٹیمیں بڑے ریجنزاور ہمسایہ ملک کی مجلس انصار اللہ کی ٹیموں کے ساتھ دوستانہ میچز کا انعقاد کریں گی۔
  • مجالس کو سپورٹس پروگراموں کے ذریعے جرمنوں نیز دیگر اقوام کے لوگوں کے ساتھ دوستانہ تعلقات کے قیام میں مدد ملتی ہے، جماعت کے تعارف وغیرہ کیلئے روابط استوار کرنے کی خاطر ایسے دلچسپ دوستانہ میچز کا اہتمام (سال میں کم از کم تین مرتبہ ) کیا جائے گا۔
  • مجالس اور ریجنز اپنے سپورٹس سامان کے سلسلہ میں ڈیمانڈ مرکزی قیادت ذہانت و صحت جسمانی کو بھجوائیں گی۔
  • انصار کو باقاعدگی سے انفرادی طور پر اپنی صحت کی جانب توجہ دلانے کی غرض سے جملہ ہدایات پر مشتمل مضامین و مشورہ جات ’’الناصر ‘‘ اور ماہانہ سرکلر میں چھپوانے کا انتظام کیا جائے گا۔زعمائے مجالس یہ مضامین و ہدایات اپنے ماہانہ اجلاس میں وقت کی مناسبت سے پڑھ کر سنائیں گے تاکہ صحت سے متعلق احساس کو اُجاگر کیا جاتا رہے۔
  • رپورٹ اور جائزہ فارم کے ذریعے تجزیہ پر مبنی رپورٹ تیار کر کے صدر صاحب مجلس کی خدمت میں پیش کی جاتی رہے گی اور مجالس کو بھی اس سے آگاہ کیا جاتا رہے گا۔ (انشاء اللہ العزیز)