Urdu – اردو

قیادت وقفِ جدید

  • بانئ وقفِ جدید حضرت خلیفۃ المسیح الثانیؓ اس بابرکت تحریک کی اہمیت کے متعلق فرماتے ہیں:

    ’’ پس احبابِ جماعت کو تحریک کرتا ہوں کہ وہ اس تحریک کی اہمیت کو سمجھیں اوراس کی طرف پوری توجہ دیں اور اس کو کامیاب بنانے میں پورا زور لگائیں اور کوشش کریں کہ کوئی فردِ جماعت ایسا نہ رہے جو صاحبِ استطاعت ہوتے ہوئے اس چندے میں حصہ نہ لے۔ ‘‘

    (بحوالہ الفضل 5؍ جنوری 1962ء)

  • مجلس کا کو ئی ناصر ایسا نہ ہو جو وقفِ جدید کے مالی جہاد میں شامل ہونے سے محروم رہ جائے۔
  • ہر ناصر کو توجہ دلائی جائے کہ وہ اس بات کا جائزہ لے کہ کیا اس کے گھر کا ہر فرد وقفِ جدید میں شامل ہے؟
  • سال میں دو دفعہ عشرہ وقفِ جدید منایا جائے اور احباب کو اس کی افادیت اور تحریک کے مقاصد کے بارے میں بتایاجائے اور وصولی کے سلسلہ میں جماعت کے سیکرٹری وقفِ جدید؍سیکریٹری مال کی معاونت کی جائے۔

چندہ بالغاں: انصار،خدام،لجنہ

دفتر اطفال: اطفال وناصرات اور بچگان

ننھے مجاہدین: معاونین خصوصی صفِ اوّل و صفِ دوم

وقفِ جدید کی تحریک حضرت خلیفتہ المسیح الثانیؓ نے1957ء میں جاری فرمائی۔اوّل فائدہ تو پاکستان نے اُٹھایا پھر ہندوستان اور اب ساری دُنیا فائدہ اُٹھا رہی ہے۔

حضرت خلیفتہ المسیح الرابع ؒ نے اس تحریک میں ساری دُنیا کو شامل کرکے خدا کی رحمت کو جذب کرنے کے سامان مہیّا فرمائے۔ اس وقت دُنیا کے غریب ممالک کے پسماندہ علاقے بالخصوص اس تحریک سے بہرہ مند ہو کر اسلام کے جھنڈے تلے اکٹھے ہورہے ہیں۔